جاسوسی تسلسل، امریکی الیکٹرک کمپنی روسی ہیکروں کے نشانے پر

جاسوسی تسلسل، امریکی الیکٹرک کمپنی روسی ہیکروں کے نشانے پر

امریکا میں بجلی کی سپلائی کےلیے کام کرنے والی ایک مقامی کمپنی نے دعویٰ کیا ہے کہ روسی ہیکروں نے بالواسطہ طور پر کمپنی کے کمپیوٹر سسٹم کو ہیک کرنے کی کوشش کی ہے۔

خبر رساں اداروں کی رپورٹس کے مطابق امریکی ریاست فیر مونٹ میں قائم ایک الیکٹرک کمپنی کی طرف سے جاری کردہ بیان میں کہا گیا ہے کہ مبینہ روسی ہیکروں نے کمپنی کے ایک اہلکار کا کمپیوٹر ہیک کیا اور کمپیوٹر پر صدر باراک اوباما کا نام ’گریزلی اسٹیپ‘ لکھ کر ہیکنگ کی کوشش کی گئی۔

امریکی الیکٹرک سپلائی کمپنی بریلینگ ٹن کی انتظامیہ کا کہنا ہے کہ کمپنی کے ایک اہلکار کے کمپیوٹر سسٹم کو فوری طور پرسسٹم سے الگ تھلگ کردیا گیا ہے۔ ماہرین مزید چھان بین بھی کررہے ہیں۔

خیال رہے کہ امریکا اور روس کےدرمیان حالیہ ایام میں ماسکو کی امریکا میں مبینہ جاسوسی پر کشیدگی پائی جا رہی ہے۔ امریکی صدر باراک اوباما نے جاسوسی کے اسکینڈل میں ملوث ہونے کے شبے میں 35 روسی سفارت کاروں کو ملک بدر کردیا ہے جب کہ روس کی کئی کمپنیوں پر اقتصادی پابندیاں بھی عاید کی گئی ہیں۔

امریکی اخبار ’واشنگٹن پوسٹ‘ کے مطابق روسی ہیکروں نے فیر مونٹ ریاست میں ایک الیکٹرک کمپنی کے کمیوٹر سسٹم میں نقب زنی کی کوشش کی ہے تاہم تکنیکی ماہرین نے کمپیوٹر سسٹم کی ہیکنگ کی کوشش کو ناکام بنا دیا ہے۔